مارچ اپریل کے دن بھی
کتنے عجیب ھوتے ھیں
جب پھول کھلتے ھیں
دل مرجھانے لگتے ھیں
کچھ بچھڑے لوگ یاد آنے لگتے ھیں
دل میں یادوں کے نشتر چبھوتے ھیں
کون کہتا ھے بہاریں خوشیاں لاتی ھے
یہ تو اداسیوں سے دامن بھر جاتی ھیں