Khud ko khud se juda kare koi

Khud ko khud se juda kare koi
Dil ko dard'aashna kare koi

خود کو خود سے جُدا کرے کوئی
دل کو درد آشنا کرے کوئی

Kho ke aaya hoon jis gali ma dil
Us gali ka pata kare koi

کھو کے آیا ہوں جس گلی میں دل
اس گلی کا پتہ کرے کوئی

Hus'n ki inteha tumhi thehre
Ishq ki inteha kare koi


 


حسن کی انتہا تمہی ٹھہرے
عشق کی انتہا کرے کوئی

Apna hi dil jab apne bas ma na ho
Kyun kisi ka gila kare koi

اپنا ہی دل جب اپنے بس میں نہ ہو
کیوں کسی کا گلہ کرے کوئی

Ab na aaye ga koi parwana
Sar-e-mehfil jala kare koi

اب نہ آئے گا کوئی پروانہ
سرِ محفل جلا کرے کوئی

Do qadam koo-e-yaar se maqtal
Bas zara haosala kare koi

دو قدم کوئے یار سے مقتل
بس ذرا حوصلہ کرے کوئی

Jab muqaddar na saath de Arif
Kaise wa'ada kare koi

جب مقدر نہ ساتھ دے عارف
کیسے وعدے وفا کرے کوئی