کیوں اتنے قریب چلا آتا ہے کویی
کیوں محبت کا احساس دلاتا ہے کویی


 


جب عادت سی ہو جاتی ہے دل کو اسکی
تو پھر کیوں دور چلا جاتا ہے کویی