Results 1 to 2 of 2

Thread: Poor condition of Government Hospitals in Pakistan

  1. #1
    Moderator Array mahima's Avatar
    Join Date
    Jan 2007
    Age
    30
    Posts
    10,676
    Country: Pakistan
    Rep Power
    21

    Poor condition of Government Hospitals in Pakistan



    کل میرے ایک دوست طارق صاحب چیچہ وطنی سے کمالیہ آئے ہوئے تھے۔ دوستوں سے ملاقات کے بعد وہ کوئی آٹھ بجے شب کے قریب کمالیہ سے اپنی موٹر سائیکل پر سوار ہوکر چیچہ وطنی جارہے تھے کہ واہگی نہر سے تھوڑا سا پہلے ایک غلط سائیڈ سے آنے والی گدھا ریڑھی سے ٹکرا گئے۔ ٹکر اتنی زبردست تھی کہ طارق صاحب کے گھٹنے میں ریڑھی کی ایک لکڑی گھُس کر آرپار ہوگئی۔
    مضروب کو فوری طور پر تحصیل ہیڈ کوارٹر کمالیہ میں لے جایا گیا جہاں پر وُہی پُرانا ایک رونا رویا گیا کہ ہمارے پاس چونکہ سرجری کی بُنیادی سہولیات میسر نہیں ہیں اس لئیے ہم آپکو ڈی ایچ کیو ٹوبہ ریفر کرسکتے ہیں۔ آپ اندازہ لگا لیں کہ تین لاکھ کی آبادی والے اس شہر میں ایک بھی سرجن مہیا نہیں ہے اور نہ ہی سرجری کی سہولیات میسر ہیں۔
    پھر اس کے بعد مرہم پٹی کرنے کے بعد مریض کو ڈی ایچ کیو ٹوبہ ریفر کردیا جاتا ہے۔ ٹھیک رات دس بج کر بیس منٹ پر مریض ڈی ایچ کیو ٹوبہ کی ایمرجنسی میں داخل ہوجاتا ہے تو پتہ چلتا ہے کہ ڈاکٹر نعمان صاحب کی ڈیوٹی ہے لیکن وہ ڈیوٹی کرنے کی بجائے اپنے گھر میں آرام کررہے ہیں۔ ایک بندہ بجھوایا جاتا ہے جو ڈاکٹر صاحب کو بتاتا ہے کہ سر آجائیں اپنا فرض ادا کریں حکومت پاکستان نے آپکی ڈیوٹی گھر پر نہیں بلکہ ڈی ایچ کیوہسپتال کی ایمرجنسی میں لگائی ہے۔
    مریض درد سے کراہتا رہا، چیختا اورچلاتا رہا لیکن ڈاکٹر صاحب نہ آئے۔ بار بار ڈاکٹر صاحب کو بُلانے پر وہ ٹھیک 11بج کر 38 منٹ پر تشریف لائے اور پھر اُنہوں نے مریض کو آپریش تھیٹر میں شفٹ کرنے کا کہا۔ آپ بے حسی کا اندازہ لگا لیں کہ ایمرجنسی میں مریض رات کے10 بج کر 20 منٹ پر پہنچ رہا ہے اور ڈاکٹر 11بج کر38 منٹ پر تشریف لے کرآتا ہے۔
    یہ نہ تو ایسا کوئی پہلا واقعہ ہے اور نہ ہی کوئی آخری۔ ہر مریض کے ساتھ ایسا ہی ہوتا ہے۔ سب لوگ ایسے ہی دھکے کھاتے ہیں، روتے بلکتے ہیں منتیں سماجتیں کرکے اپنے پیاروں کا علاج کرواتے ہیں۔ کبھی کبھی ڈاکٹرز کی تضحیک کا نشانہ بھی بنتے ہیں لیکن چُپ چاپ اس بُرے رویے کے ساتھ خاموش معاہدہ کرلیتے ہیں اور خاموشی سے یہ سب برداشت کرتے رہتے ہیں۔
    جب سے ٹوبہ ٹیک سنگھ سے چیچہ وطنی تک یہ کارپٹ روڈ بچھی ہے تب سے یہ سڑک ایک خونی سڑک کا روپ دھارچکی ہے۔ جہاں ہر ہفتے کسی نہ کسی کی سڑک حادثے میں موت ہوتی ہے۔ پورے ضلع کی ٹریفک پولیس بھنگ پی کر سورہی ہے۔ ریڑھیوں پر، ٹریکٹر ٹرالیوں پر کسی قسم کے ریفلیکٹر نہیں لگے جس سے یہ دور سے سڑک پر نظر آجائیں۔
    یہ پنجاب کی واحد سڑک ہے جس کی کوئی مقررہ حد رفتار کا تعین نہیں ہے۔ میرے خیال میں ٹوبہ سے لیکر چیچہ وطنی تک اس سڑک کا کنٹرول موٹروے پولیس کو دے دینا چاہیے۔ جو حد رفتار سے سفر کرنے والوں کا چالان کرے، جو بغیر ہیلمٹ کے موٹر سائیکل چلانے والوں کو چالان کرے۔ حادثات کو روکنے کا واحد حل یہی ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ اس سڑک کو ون وے بنایا جائے تاکہ حادثات کی فوری روک تھام کی جاسکے۔
    اگلا سوال صرف اتنا ہے کہ ان تجاویز کو حکام بالا تک کون پہنچائے؟ آپ سب سے گزارش ہے کہ اس پوسٹ کو ذیادہ سے ذیادہ شئیر کریں اور میرے اوپر پیش کئیے گئے مطالبات کوفوری طور پر حکام بالا کے نوٹس میں لایا جائے اور سسٹم کو ٹھیک کیا جائے۔ ورنہ آج اگر یہ حادثہ طارق بھائی کےساتھ ہوا ہے تو کل کو میرے اور آپکے ساتھ بھی ہوگا۔ بہت سے لوگ ان جان لیوا حادثات میں اپنی جانئں گنوا چکے ہیں، بہت سے معذور ہوچکے ہیں۔ لیکن جن اداروں نے عملی اقدام اُٹھانا ہے اُن اداروں کے لبوں پر لمبی خاموشی ہے۔

        This post contain attachments.

    Attached Images  



  2. #2
    Administrator Array admin's Avatar
    Join Date
    Nov 2006
    Location
    Khanewal
    Posts
    7,060
    Country: Pakistan
    Rep Power
    10
    oh my God


     


    justice

Thread Information

Users Browsing this Thread

There are currently 1 users browsing this thread. (0 members and 1 guests)







Similar Threads

  1. Replies: 1
    Last Post: 01-22-2017, 08:21 AM
  2. urdu - Government of Pakistan
    By Tahir Bati in forum Religion
    Replies: 0
    Last Post: 02-07-2013, 01:04 PM
  3. An open letter to Pakistan Government
    By Tahir Bati in forum Politics
    Replies: 0
    Last Post: 01-15-2013, 10:56 AM
  4. Poor government...
    By darani in forum Jokes
    Replies: 1
    Last Post: 03-01-2010, 03:09 AM
  5. Replies: 1
    Last Post: 09-13-2009, 10:00 AM

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •  



Get Daily Forum Updates

Get Most Amazing E-mails Daily
Full of amazing emails daily in your inbox
»» Join Nidokidos E-mail Magazine
Join Nidokidos Official Page on Facebook


Like us on Facebook | Get Website Updates | Get our E-Magazine