Results 1 to 1 of 1

Thread: ہر قاتل کو چارہ گر سے ہم تعبیر کرتے ہیں

  1. #1






    carefree is offline
    Member Array carefree's Avatar
    Join Date
    Feb 2012
    Posts
    3,510
    Country: Canada
    Rep Power
    8


    ہر قاتل کو چارہ گر سے ہم تعبیر کرتے ہیں



    ہماری شاعری میں دل دھڑ کتا ہے زمانے کا
    وہ نالاں ہیں ہماری لوگ کیوں توقیر کرتے ہیں
    اُنہیں خوشنودئ شاہاں کا دائم پاس رہتا ہے
    ہم اپنے شعر سے لوگوں کے دل تسخیر کرتے ہیں
    ہمارے ذہن پر چھائے نہیں ہیں حرص کے سائے
    جو ہم محسوس کرتے ہیں وہی تحریر کرتے ہیں
    بنے پھرتے ہیں کچھ ایسے بھی شاعر اس زمانے میں
    ثنا غالب کی کرتے ہیں نہ ذکرِ میر کرتے ہیں
    حَسین آنکھوں،مُدھر گیتوں کے سُندر دیس کو کھو کر
    میں حیراں ہوں وہ ذکرِوادئ کشمیر کرتے ہیں
    ہمارے دور کا جالب مداوا ہو نہیں سکتا
    کہ ہر قاتل کو چارہ گر سے ہم تعبیر کرتے ہیں...................
    حبیب جالب










    Last edited by carefree; 03-27-2016 at 05:54 PM.





Thread Information

Users Browsing this Thread

There are currently 1 users browsing this thread. (0 members and 1 guests)







Similar Threads

  1. Replies: 0
    Last Post: 02-18-2016, 01:48 PM
  2. Replies: 0
    Last Post: 01-28-2015, 09:10 PM
  3. Replies: 0
    Last Post: 03-25-2014, 11:17 AM
  4. کہتا ہے دل کچھہ اور ٌ رابعہ اقبال رابی'
    By rabia iqbal rabi in forum Shair-o-Shairi
    Replies: 2
    Last Post: 11-22-2013, 07:39 PM
  5. Replies: 1
    Last Post: 01-24-2013, 12:18 AM

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •  








Like us on Facebook | Get Website Updates | Get our E-Magazine


Get Daily Forum Updates

Get Most Amazing E-mails Daily
Full of amazing emails daily in your inbox
Join Nidokidos E-mail Magazine
Join Nidokidos Official Page on Facebook