Name:  12804878_1572492173068744_6197500016467553705_n.jpg
Views: 718
Size:  24.0 KB

کیا آپ جانتے ہیں کہ ہمارا نظامِ تعلیم ہندؤں کی ذات پات کے نظام کی طرح ہے.؟؟؟

ایک طبقہ مدارس کے شاگردوں کا ہے جو اردو میڈیم اسکولوں والے بچوں سے نفرت کرتے ہیں, اور اردو میڈیم والے بچے سرکاری انگلش میڈیم والے بچوں سے نفرت کرتے ہیں,, اور سرکاری انگلش میڈیم والے بچے پرائیویٹ سکول کے بچوں سے نفرت کرتے ہیں اور پرائیویٹ سکول والے بچے جو میڑک کر رہے ہوں وہ سب ایلیٹ پرائیویٹ سکول کے بچے اور اے لیول والوں سے نفرت رکھتے ہیں....
یہ اس لیے جہاں ہم نے معاشرے میں پھوٹ ڈالنے والے اور تباہ کن درجہ بندی بنا دی ہے...
اس سڑی ہوئی کھانے کی سیریز میں سب سے اوپر ہیں اشرافیہ اور امیر خاندانوں کے ,, جبکہ ہماری پوری مستقبل کی نسل کو ان نجی اسکولوں کی طرف سے تباہ کیا جا رہا ہے، بیکن ہاؤس, فوربالز,روٹس,ہیڈ اسٹارٹ اور اس طرح کے بہت سے ہیں...
یہ ہماری قوم کا ایک بہت بڑا نقصان ہے جو یہ نجی پیسہ کمانے والے سیٹھ قوم کے ساتھ کر رہے ہیں۔... ہمارے پورے مستقبل کو پیسوں کے لئے فروخت کیا گیا، نقصان اتنا المناک ہے کہ آپ اس کا تصور بھی نہیں کر سکتے, ہر سکول کا الگ معیار تعلیم ہے, الگ نصاب ہے جو مغرب سے درآمد کیا جاتا ہے بغیر کسی اخلاقیات کے,مزہبی و ثقافتی روایات کے.... ایسی قوم تیار کی جارہی ہے جس کا اسلام, پاکستان اور امت سے کوئی تعلق نہیں...
ان اشرافیہ کے بچے نجی اسکولوں میں زیر تعلیم ہیں,ان بچوں میں یہ خصوصیات ہیں،

  1. وہ اردو میں لکھ اور پڑھ نہیں سکتے.
  2. وہ پاکستان اور تحریک پاکستان کے متعلق کچھ نہیں جانتے,
  3. وہ اسلامی عقیدے اور نظریے اقتدار اور قرآن و سنت سے بلکل لاعلم ہیں..
  4. انہیں اسلامی تاریخ 1400 سال کے عظیم ورثے کا علم تک ہی نہیں ہے...
  5. وہ دین میں حلال و حرام اور حدود کا کوئی تصور نہیں رکھتے...
  6. انتہائی بے ادب, اور انہیں ادب ,,گستاخی اور اخلاقیات کا علم نہیں ہے...
  7. وہ اقبال , بابا قائد, اردو, شاعر, تاریخ کے بارے ميں کچھ علم نہیں..
  8. اس نسل کو تعلیم یافتہ کہا جاسکتا ہے؟؟؟ یہ ہمارے مستقبل کی نسلیں ہیں.؟؟ ہم نے ان کا کیا کیا ؟؟؟

اندرونی انتظامیہ, اساتذہ, مالک, والدین, علماء حیرت انگیز جرائم کے ذمہ دار ہیں...
جلد ہی, کئی افراد جو پیسے کے اندھے لالچی نجی اسکولوں کے مالکان کو سزا دینی ہوگی جنہوں نے ہماری پوری نسلوں کو تباہ کر دیا ہے۔
اگر کسی نجی تعلیمی اداروں میں اوپر ذکر کے گئے لاپتہ مضامین پڑھانے میں ناکام ہو جاتا ہے, تو مالکان کو گرفتار کیا جائے اور اسے جیل بھیجا جائے ,اسکی ساری جائداد ضبط کر جائیں کیونکہ انکا جرم سب سے بدتر ہے...