Name:  12734145_1303975559618976_3703527147646499951_n.jpg
Views: 1396
Size:  11.9 KB


 





ایک دیہاتی نے ٹارچ خریدی ، اسے رات کو آن کرلیا ، بہت خوش ھوا ، لیکن جب اسنے ٹارچ کی روشنی کو بند کرنا چاھا تو کچھ سمجھ میں نہ آئی کہ اسے بند کیسے کرنا ھے - لالٹین کی طرح پھونکیں مارتا رھا ، آخر کار تنگ آکر رضائی کے میں چھپا دی - صبح اٹھ کر دیکھا تو ٹارچ بیٹری ختم ھونے کی وجہ سے بند ھوچکی تھی - ماتھے پر ھاتھ مار کر بولا -۔۔۔۔۔۔۔۔ لگدا اے انیوں ٹھنڈ لگ گئی ھوئے گی ، ٹھنڈ دی وجہ نل مرگئی اے۔۔۔۔


وہ دیہاتی بعد میں بڑا ھو کر شھر آگیا ، اب وہ بیواقوف نھیں تھا ، زھین ھو گیا تھا۔۔۔۔۔۔ سمارٹ فون لے لیا ، ویٹس ایپ استعمال کرنے لگا ، رات کسی کا میسیج آیا ، اسنے پڑھا ، کسی دوست کا تھا لیکن وہ اسے جواب نھیں دینا چاھتا تھا۔۔۔۔۔ ، لیکن اسے احساس ھوا کہ یہ میسیج پڑھ لیا ھے ، اب تو اسے پتہ چل جائے گا کہ پڑھ لیا ھے ماتھے پر ھاتھ مارا کہ اب کیا کروں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔، اسنے فورن سمارٹ فون رضائی میں چھپا دیا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔