Name:  11949405_1053180951394046_4736156849908800257_n.jpg
Views: 316
Size:  23.7 KB


 


{ انجیل جولی کا ھمارے حکمرانوں کے منہ پر زناٹےدار تھپڑ }

ہالی ووڈ کی نمبر ون اداکارہ اور اقوام متحدہ کی سفیر انجلینا جولی نے جب پاکستان میں سیلاب متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا اور امریکہ واپسی پر اقوام متحدہ کے لئے ایک خصوصی رپورٹ بھی لکھی جس میں انہوں نے ایک طرف متاثرین کی صورتحال کو انتہائی دردناک انداز میں پیش کیا اور دوسری طرف پاکستانی حکمرانوں کی عیاشیوں اور طرز عمل کو دیکھ کر صدمے میں آ گئیں۔


انجلینا جولی جنہوں نے پاکستان میں فوٹو سیشن اور میڈیا میں آنے سے انتہائی گریز کیا اپنی رپورٹ میں لکھتی ہیں کہ انہیں یہ دیکھ کر بہت دکھ ہوا کہ اعلیٰ حکام اور بااثر شخصیات ان سے ملنے کے لئے قطاروں میں کھڑے ہو کر متاثرین کو پیچھے دھکیلتی رہے۔ ہر کسی کی یہی خواہش تھی کہ وہ مجھ سے ملے۔ انہیں یہ دیکھ کر نہایت تکلیف ہوئی جب وزیراعظم نے ان سے خواہش ظاہر کی کہ ان کے اہل خانہ ہالی ووڈ کی نمبر ون ایکٹریس سے ملنے کے لئے بے چین ہیں۔ ان کی فیملی مجھ سے ملنے کے لئے ملتان سے خصوصی طور پر ایک طیارے کے ذریعےاسلام آباد پہنچی اور مجھے بیش قیمت تحائف دئیے۔ وزیراعظم اور ان کی فیملی نے مجھے انواع و اقسام کے کھانے کی دعوت بھی دی۔ انجلینا لکھتی ہیں کہ میرے لئے وہ انتہائی افسوس اور دکھ کا موقع تھا جب میز پر طرح طرح کے کھانوں کی بھرمار تھی۔ وہ کھانے ان سینکڑوں لوگوں کے لئے کافی تھے جو محض ایک آٹے کے تھیلے اور پانی کی چھوٹی سی بوتل کے لئے ایک دوسرے کو دھکے دے کر اس تک پہنچنا چاہتے ہیں۔ انہیں اس بات پر بھی حیرت ہوئی کہ ایک طرف ملک میں بھوک اور افلاس ہے اور دوسری طرف وزیر اعظم ہاﺅس اور کئی دیگر سرکاری عمارتوں کی شان و شوکت اور سج دھج دیکھ کر حکمرانوں کی عیاشی مغرب کو بھی حیران کر دینے کے لئے کافی ہے۔انجلینا جولی نے اپنی رپورٹ میں اقوام متحدہ کو مشورہ دیا ہے کہ پاکستان پر زور دیا جائے کہ اقوام عالم سے امداد مانگنے سے پہلے عیاشیاں ختم اور اخراجات کم کرے ۔۔۔