دل ھجر کے درد سے بوجھل ھے
اب آن ملو تو بہتر ھو


اس بات سے ھم کو کیا مطلب
یہ کیسے ھو، یہ کیونکر ھو


یہ دل ھے کہ جلتے سینے میں
اک درد کا پھوڑا الہڑ سا


نہ گپت رھے، نہ پھوٹ بہے
کوئی مرھم ھو، کوئی نشتر ھو


ھم سانجھ سمۓ کی چھایا ھیں
تم چڑھتی رات کی چندرما


ھم جاتے ھیں___ تم آتے ھو
پھر میل کی صُورت کیونکر ھو.


وہ راتیں چاند کے ساتھ گئیں
وہ باتیں چاند کے ساتھ گئیں


اب سُکھ کے سپنے کیا دیکھیں
جب دُکھ کا سُورج سر پر ھو*.


"ابنِ انشاء"

Name:  poetry (2).jpg
Views: 50
Size:  93.4 KB