Results 1 to 2 of 2

Thread: شکوہ بھی جفا کا کیسے کریں، اک نازک سی دشوار

  1. #1
    Member Array carefree's Avatar
    Join Date
    Feb 2012
    Posts
    3,504
    Country: Canada
    Rep Power
    10

    شکوہ بھی جفا کا کیسے کریں، اک نازک سی دشوار




     




    شکوہ بھی جفا کا کیسے کریں، اک نازک سی دشواری ہے
    آغاز وفا خو ہم نے کیا تھا، پہلی بھول ہماری ہے



    دکھ تم کو جب جب پہنچا ہے، خود ہم نے آنسو پونچھے ہیں
    اب دل پہ ہماری چوٹ لگی ہے، اب کے تمہاری باری ہے


    بے کھیل بازی جیت کے تم ہم سے شاکی رہتے ہو
    اور ہم کو دیکھو ہم نے خود جان کے بازی ہاری ہے


    وہ عہد تھا عیش و جوانی کا، اب عمر ہے سعی تلافی کی
    پہلے بھی نیند پرائی تھی اور اب بھی شب بیداری ہے

    کچھ درد نہاں، کچھ فکر جہاں، کچھ شرم خطا، کچھ خوف سزا
    اک بوجھ اٹھائے پھرتا ہوں، اور بوجھ بھی کتنا بھاری ہے


    جو کاری زخم لگا ہے دل پر، پہلے اس کی فکر کرو
    یہ بعد میں دیکھا جائے گا، یہ کس کی کار گزاری ہے


    جو صاحب گھر گھر میری بابت زہر اگلتے پھرتے ہیں
    وہ صرف میرے ہمسائے نہیں ہیں، ان کی قرابت داری ہے

    اس راہ سے ہوکر گزرے ہیں ، کچھ رہبر بھی کچھ رہزن بھی
    اب نقش قدم پہچان کے چلنا آپ کی ذمہ داری ہے


  2. #2
    Member Array rabia iqbal rabi's Avatar
    Join Date
    May 2012
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    2,366
    Country: Pakistan
    Rep Power
    9
    ab ke tumhari bari hae
    acchi ghazal hae





Thread Information

Users Browsing this Thread

There are currently 1 users browsing this thread. (0 members and 1 guests)







Similar Threads

  1. Replies: 0
    Last Post: 02-11-2013, 09:21 AM
  2. Replies: 1
    Last Post: 02-02-2013, 01:11 PM
  3. Replies: 0
    Last Post: 12-28-2012, 03:37 PM
  4. Replies: 1
    Last Post: 12-01-2012, 06:57 PM
  5. Replies: 1
    Last Post: 10-05-2012, 07:09 PM

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •