عمران خان کو برا کہنے والوں سےمیرا ایک سوال ہے: دل پر ہاتھ رکھ کر بتاو آپ ملک کے حالات سے خوش ہو؟؟؟؟؟؟
کیا ملک ترقی کی طرف جا رہا ہے یہ تباہی کی طرف جا رہا ہے؟؟؟
کیا پچھلے پانچ سالوں میں غربت کم ہوئی ہے یا اس میں اضافہ ہوا ہے؟؟؟؟؟؟؟؟
جن حکمرانوں نے ملک کا بیراغرق کیا ہے ان کو کچھ کہنے کے بجاٴے تقریباً ساری قوم عمران خان میں سے کیرے نکلنے بیٹھ گی ہے جو بندە حکومت میں کبھی تھا ہی نہیں ہم سب اس کے پیچے پر گے ہیں کیا قوم ہے یہ، قوم کے مجرموں کو چھوڑ کر بے قصور کو پکرا لو.
جس بندە نے اقتدار سے باہر رہے کر ملک کو اکلوتا کینسر ہسپتال دیا ، نمل یونیورسٹی دی جہاں انٹرنشنل لیول کی پڑھائی کے ساتھ برادفورڈ یونیورسٹی کی ڈگری بھی ملتی ہے، جس نے وورلڈکپ جیتوایا اور پھر جس نے عمران خان فاؤنڈیشن سے سیلاب اور زلزلے کے متاثرین کے لیا کام کیا اور آج جس نے نوجوانوں کو عزت دی یہ سب ایک سال سے جو نوجوانوں پر مہربانیاں ہو رہی ہیں اس کی وجھ بھی عمران خان ہے کیوں کے بہتر مستقبل کے لیے جب نوجوانوں نے عمران خان کو اپنا لیڈر مانا تو ساری سٹیٹس قو کی نیندیں اڑ گی اور انہوں نے سارے خزانوں کا رخ نوجوانوں کی طرف موڑ دیا اور اس کا فائدہ بھی ان کو ہوا جس جس کو لیپ ٹاپ ملا تقریباً وہ بک گیا اور ذاتی مفاد کو قومی مفاد پر ترجیح دی .

لیکن ان تمام بھائیوں ور بہنوں سے میں ایک بات کہوں گا خدا نہ کرے اگر انھی آزماے ہوے لوگوں کو ووٹ دینے سے ہمارے اس پیارے پاکستان کو کچھ ہوا تو آپ بھی اس جرم میں برابر کے حصے دار ہوں گے .الله آپ کو ملک کا سوچنے کی توفیق عطا فرماتے آمین