Results 1 to 2 of 2

Thread: جون ایلیا - زندگی کس طرح بسر ہو گی

  1. #1
    Administrator Array admin's Avatar
    Join Date
    Nov 2006
    Location
    Khanewal
    Posts
    7,258
    Country: Pakistan
    Rep Power
    10

    جون ایلیا - زندگی کس طرح بسر ہو گی



    سر ہی اب پھوڑیے ندامت
    نیند آنے لگی ہے فرقت میں


    ہیں دلیلیں تیرے خلاف مگر
    سوچتا ہوں تیری حمایت میں


    روح نے عشق کا فریب دیا
    جسم کا جسم کی عداوت میں


    اب فقط عادتوں کی ورزش ہے
    روح شامل نہیں شکایت میں


    عشق کو درمیاں نہ لاؤ کہ میں
    چیختا ہوں بدن کی عسرت میں


    یہ کچھ آسان تو نہیں ہے کہ ہم
    روٹھتے اب بھی ہیں مروت میں


    وہ جو تعمیر ہونے والی تھی
    لگا گئی آگ اس عمارت میں


    اپنے حجرہ کا کیا بیاں کہ یہاں
    خون تھوکا گیا شرارت میں


    وہ خلا ہے کہ سوچتا ہوں میں
    اس سے کیا گفتگو ہو خلوت میں


    زندگی کس طرح بسر ہو گی
    دل نہیں لگ رہا محبت میں


    جون ایلیا


     



  2. #2
    Member Array rabia iqbal rabi's Avatar
    Join Date
    May 2012
    Location
    Karachi, Pakistan, Pakistan
    Posts
    2,365
    Country: Pakistan
    Rep Power
    8
    zindagi kis tarha basar ho ge??? khubsurat intikhab...

Thread Information

Users Browsing this Thread

There are currently 1 users browsing this thread. (0 members and 1 guests)







Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •  



Get Daily Forum Updates

Get Most Amazing E-mails Daily
Full of amazing emails daily in your inbox
Join Nidokidos E-mail Magazine
Join Nidokidos Official Page on Facebook


Like us on Facebook | Get Website Updates | Get our E-Magazine